جب تو پيدا ہوا كتنا مجبور تھا
يہ جہان تيري سوچو ں سے بھي دور تھا
ہاتھ پاؤں بھي تب تيرےاپنے نہ تھے
تري آنكھوں ميں دنيا كے سپنے نہ تھے
تجھ كو آتا صرف رونا ہي تھا
دودھ پي كے كام تيراسونا ہي تھا
تجھ كوكو چلنا سكھايا تھا ماں نے تيري
تجھ كو دل ميں بسايا تھا ماں نے تيري
ماں كے سائے ميں پروان چڑہنےلگا
وقت كے ساتھ قد تيرا بڑہنے لگا
آہستہ آہستہ تُو كڑيل جوان ہو گيا
تُجھ پہ مہربان سارا جہان ہو گيا
زوربازو پہ تُو بات كرنے لگا
خُود ہي سجنے لگا خُود ہي سنورنے لگا
ايك دن ايك لڑكي تجھے بھا گئ
بن كے دلہن وہ تيرے گھر آگئ
اپنے فرض تُو دور ہونے لگا
بيج نفرت كے تُو خُود ہي بونے لگا
پھر تُو ماں باپ كو بھي بُھلا نے لگا
تير باتوں كے پھر تُو چلانے لگا
بات بے بات اُن سےتُو لڑنے لگا
قاعدہ نيا اك پھر تُو بنانے لگا
ياد كر تجھ سے ماں نے كہا اك دن
اب ہمارا گزارا نہيں تيرے بن
سن كے يہ بات تُو طيش ميں آگيا
تيرا غصہ تيري عقل كو كھا گيا
جوش ميں آكے تُو نے يہ ماں سے كہا
ميں تھا خاموش سب ديكھتا ہي رہا
آج كہتا ہوں پيچھا ميرا چھوڑ دو
جو ہے رشتہ ميرا تُم سےوہ توڑ دو
جاؤ جا كے كہيں كام دھندہ كرو
لوگ مرتے ہيںتم بھي كہيں جا مرو
بيٹھ كر آہيں بھرتي تھي ميں رات بھر
ان كي آہوں كا تجھ پر ہوا نہ اثر
ايك دن باپ تيرا چلا رُوٹھ كر
كيسے بكھري تھي پھر تيري ماں ٹُوٹ كر
پھر وہ بھي بس كل كو بُلاتي رہي
زندگي اسكو ہر روز ستاتي رہي
ايك دن موت كو بھي ترس آ گيا
اسكا رونا بھي تقدير كو بھا گيا
اشك آنكھوں ميں تھے وہ روانہ ھُوئي
موت كي ايك ہچكي بہانہ ھوئي
اك سكون اس كے چہرے پہ چھانے لگا
پھر تو ميت كو اسكي سجانے لگا
مدتيں ہوگئي’ آج بُوڑھا ہے تُو
ٹوٹي كُٹيا پہ پڑا بُرا ہے تو
تيرے بچے بھي اب تجھ سے ڈرتے نہيں
نفرتيں ہيں’ محبت وہ كرتے نہيں
درد ميں تو پكارے كہ ” اوميري ما ں١”
تيرے دم سے روشن تھے دونو جہان
وقت چلتا رہا ہے وقت ركتا نہيں
ٹوٹ جاتا ہے وہ جو جھكتا نہيں
بن كے عبرت كا تو نشان رہ گيا
ڈھونڈ زور تيرا كہاں رہ گيا
تو احكام ربي بھلاتا رہا
اپنے ماں باپ كو تو ستاتا رہا
كاٹ لے وہي تو نے بويا تھا جو
تجھ كو كيسے ملے كھويا تھا جو
ياد كر كے گيا دور تو رونے لگا
كل تو نے جو كيا آج پھر ہونے لگا
موت مانگے تجھے موت آتي نہيں
ماں كي صورت نگاہوں سے جاتي نہيں
تو جو كھانسے اولاد ڈانٹے تجھے
تو ہے نا سور سكھ كون بانٹے تجھے
موت آئے گي تجھ كو مگر وقت پر
بن ہي جائے گي قبر تيري وقت پر
قدر ماں باپ كي اگر كوئي جان لے
اپني جنت كو دنيا ميں پہچان لے
اور ليتا رہے وہ بڑوں كي دعا
اُسي كے دونوں جہان’ اس كا حامي خدا
ہم سب اپنے ماں باپ كي قدر نہيں كرتے۔ہم پر ان كے ايسے ايسے احسانات ہيں جن كا بدلہ كسي طرح بھي نہيں اُتارا جا سكتا۔
اللہ ہم سب كو اپنے ماں باپ كي دنيا ميں خدمت كي توفيق دے آمين
ا ے باري تعالٰي ميري والدہ كي مغفرت فرما اور ان كو جنت الفردوس ميں جگہ دے اور
اے اللہ تو ميرے والد صاحب كو لمبي عمر عطا كر اور مجھے ان كي عزت اور خدمت كرنے كي توفيق دے

Advertisements